Book Name:Bunyadi Aqaid Aur Mamolat e Ahlesunnat

میں سے  جو نہر امام ابو حنیفہرَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُکے  سینہ سے  ہوتی ہوئی آئی اسے  حنفی کہا گیا جو امام مالکرَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُکے  سینہ سے  آئی وہ مذہبِ مالکی کہلایا، پانی سب کا ایک ہے  مگر نام جُداگانہ اور ان نہروں کی ہمیں ضرورت پڑی نہ کہ صحابۂ کرامرَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُمْکو جیسے  حدیث کی اسناد ہمارے  لئے  ہے  صحابۂ کرامرَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُمْکے  لئے  نہیں۔([1])

سوال :  چاروں ائمّہ کے  علاوہ کسی اور امام کی تقلید اب کیوں نہیں ہوسکتی ؟

جواب :  چاروں ائمّہ میں سے  کسی ایک امام کا مُقلّد ہونا ضروری ہے  کیونکہ اب حق انہیں چاروں میں منحصر ہے  کیونکہ ان ائمّہ اربعہ کے  اقوال ہی صحیح اسناد کے  ساتھ مروی ہیں اور صرف انکے  مذاہب ہی مُنَقّح ہیں جبکہ سلف میں ائمّہ اربعہ کے  علاوہ دیگر مجتہدین کے  اقوال نہ تو اسنادِ صحیح کے  ساتھ مروی ہیں نہ کتبِ مشہورہ میں جمعیّت کے  ساتھ مُدَوَّن ہیں کہ ان پر اعتماد صحیح ہو اور نہ ہی انکے  مذاہب مُنَقّح ہیں اسی وجہ سے  صرف ائمّہ اربعہ ہی کے  مذاہب لائقِ اعتماد وقابلِ عمل ہیں۔جیسا کہ علامہ سیّد احمد مصری طحطاوی رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہ لکھتے  ہیں : ’’هٰذِهِ الطَّائِفَةُ النَّاجِيَةُ، قَدْ اِجْتَمَعَتِ الْيَوْمَ فِيْ مَذَاهِبِ أَرْبَعَةٍ وَهُمُ الْحَنَفِيُّوْنَ وَالْمَالِكِيُّوْنَ وَالشَّافِعِيُّوْنَ وَالْحَنْبَلِيُّوْنَ رَحِمَهُمُ اللهُ تَعَالٰى وَمَنْ كَانَ خَارِجًا عَنْ هٰذِهِ الْأَرْبَعَةِ فِيْ هٰذَا الزَّمَانِ فَهُوَ مِنْ أَهْلِ الْبِدْعَةِ وَالنَّارِ‘‘یعنی اہلِ سنّت کا گروہِ ناجی اب چار مذہب میں مجتمع ہے  وہ حنفی ، مالکی ، شافعی اور حنبلی ہیں، ان سب پر اللہ تعالیٰ کی رحمت ہو ، آج کے  دور میں جو ان چار مذاہب سے  خارج ہو بدعتی اور جہنمی ہے ۔([2])

٭۔۔۔٭۔۔۔٭۔۔۔٭۔۔۔٭۔۔۔٭

   

مآخذ ومراجع

قرآن مجید

مکتبۃ المدینہ،کراچی

••••

••••••••

نام کتاب

مطبوعات/سن طباعت

نام کتاب

مطبوعات/سن طباعت

کنز  الإیمان

مکتبۃ المدینہ،کراچی

نوادر الأصول

مکتبہ امام بخاری،قاہرہ۱۴۲۹ھ

التفسیر الکبیر

دار احیاء التراث العربی،بیروت ۱۴۲۰ھ

المعجم الکبیر للطبرانی

دار احیاء التراث العربی،بیروت ۱۴۲۲ھ

روح البیان

دار احیاء التراث العربی،بیروت

فردوس الأخبار

دار الفکر،بیروت۱۴۱۸ھ

صحیح البخاری

دار الکتب العلمیۃ،بیروت۱۴۱۹ھ

شعب الإیمان

دار الکتب العلمیۃ،بیروت۱۴۲۱ھ

صحیح مسلم

دار المغنی،عرب شریف۱۴۱۹ھ

تذکرۃ الحفاظ

دار الکتب العلمیۃ،بیروت۱۴۱۹ھ

سنن أبی داود

دار احیاء التراث العربی،بیروت ۱۴۲۱ھ

الفردوس بمأثور الخطاب

دار الکتب العلمیۃ،بیروت۱۴۱۸ھ

سنن الترمذی

دار المعرفۃ، بیروت۱۴۱۴ھ

مرقاۃ المفاتیح

دار الفکر،بیروت۱۴۱۴ھ

سنن ابن ماجہ

دار المعرفہ،بیروت۱۴۲۰ھ

أشعۃ اللمعات

کوئٹہ،پاکستان۱۳۳۲ھ

المسند

دار الفکر،بیروت۱۴۱۴ھ

تاریخ بغداد

دار الکتب العلمیۃ،بیروت۱۴۱۷ھ

مشکاۃ المصابیح

دار الکتب العلمیۃ،بیروت۱۴۲۱ھ

عمدۃ القاری

دار الفکر،بیروت۱۴۱۸ھ

سنن الدارمی

دار الکتاب العربی،بیروت ۱۴۰۷ھ

مصنف عبد الرزاق

دار الکتب العلمیۃ،بیروت۱۴۲۱ھ

مجمع الزوائد

دار الفکر،بیروت۱۴۲۰ھ