Book Name:Islam kay Bunyadi Aqeeday

چکرلگائے گا۔ ([1])

          جو کچھ اس کے راستے میں آئے گا وہ اس کو تباہ و برباد کردے گا،  اس کی رفتار اُن بادلوں کی طرح ہوگی جن کو زور دار ہوا چلا رہی ہوتی ہے،  جس طرف جائے گا ہر چیز کو تباہ وبرباد کرتا ہوا گزرتاجائے گا،  اور وہ بہت سارے کرتب دکھائے گا،  وہ اپنے اِستدراج اور جادو کے زور سے لوگوں کو متاثر کرے گا جس کی وجہ سے کچھ لوگ اس کے پیچھے چل پڑیں گے،  دجال کے پاس آنکھوں کو حیران کردینے والی دو چیزیں ہوں گی جس کی وجہ سے وہ لوگوں کو اُکسائے گااور دھوکہ دے گا، اس کے پاس ایک باغ ہوگا اور ایک آگ ہوگی وہ ان کو جنت اور جہنم کہے گا اور جہاں کہیں وہ جائے گا وہ ان چیزوں کوا پنے ساتھ لے کر جائے گا،  حقیقت میں یہ ایک شعبدہ اور جادو ہوگا،  اس کی جو جنت ہوگی وہ دراصل آگ ہوگی اور جس کو وہ جہنم کہے گا وہ امن اور آرام کی جگہ ہوگی۔ وہ لوگوں کو حکم دے گا کہ وہ اُسے خدا مانیں ۔ ([2])  اور جو اس کو خدا مان لے گا وہ اسے اپنی جنت میں ڈال دے گا اور جو اس کا انکار کرے گا وہ اُسے اپنی جہنم میں ڈال دے گا۔   ([3])

          وہ مردوں کو زندہ کرے گا۔ ([4]) زمین سے سبزیاں اور گھاس اُگائے گا،  و ہ بادلوں سے پانی برسائے گا،  اس کے زیراثرجو علاقے ہوں گے اُن میں جانوروں کی تعداد بڑھ جائے گی اور وہ صحت مند ہوجائیں گے،  جانوروں کے تھنوں میں دُودھ بڑھ جائے گا،  جب جنگلوں سے گزرے گا مال و دولت کے خزانے اس کے پیچھے ایسے چل رہے ہوں گے جیسے شہد کی مکھیوں کے جُھنڈ۔ ([5])

        وہ بہت سارے اور بھی شعبدے دکھائے گا،  بالآخر یہ بات ثابت ہوجائے گی کہ وہ سب شعبدے تھے ،  استدراج تھا اور جادو کا کمال تھا اور اس کے سارے کرتب جادو کی وجہ سے محض دھوکا ہوں گے،  جیسے ہی دجال ایک جگہ کو چھوڑ کر جائے گا تو اس جگہ پر ظاہر ہونے والی ساری کی ساری شعبدے بازیاں ختم ہوجائیں گی،  جب کبھی دجال  مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ جانے کا ارادہ کرے گافرشتے اس کے رُخ کو کسی دوسری طرف پھیردیں گے۔ ([6])

             دجال کے ساتھ یہودیوں کی فوج ہوگی۔  ([7])  اور دجال کی پیشانی پر ’’   ک،  ف، ر ‘‘  یہ تین حرف نقش کیے ہوں گے (جس سے یہ واضح ہوتا ہوگا کہ یہ شخص کافر ہے)   صرف مسلمان ہی اِن حروف کو دیکھ پائیں گے اور پڑھ پائیں گے ۔ ([8])

          جب دجال دنیا کا ایک چکرپورا کرلے گا اور وہ ملک شام پہنچے گا تو یہ صبح صادق کا وقت ہوگا،  نماز فجر کی اذان ابھی مکمل نہیں ہوگی کہ حضرت عیسیٰ عَلَیْہِ السَّلَام جامع مسجد دمشق کے مشرقی منارے پر نزول فرمائیں گے۔ ([9])  امام مہدی  رَضی اللّٰہِ تَعَالٰی عَنْہ  وہاں موجود ہوں گے اور حضرت عیسیٰ عَلَیْہِ السَّلَام اُن سے فرمائیں گے کہ آپ نماز پڑھائیں ،  حضرت عیسیٰ عَلَیْہِ السَّلَام کی موجودگی دجال کے لیے بڑی تباہ کن ثابت ہوگی اور دجال پگھلنا شروع ہوجائے گا جیسا کہ نمک پانی میں پگھلتا ہے اور حضرت عیسیٰ عَلَیْہِ السَّلَام کی سانس کی خوشبو سے دجال



[1]    مسلم،کتاب الفتن، باب فی ذکر الدجال، ص۱۵۶۹، حدیث: ۲۹۳۷

[2]    مسلم،کتاب الفتن، باب ذکر الدجال، ص۱۵۶۷،حدیث: ۲۹۳۴و مسند امام احمد، مسند جابر بن عبد اللہ، ۵ / ۱۵۶، حدیث: ۱۴۹۵۹       

[3]    فیض القدیر  ، حرف الدال، ۳  /  ۷۱۹  ، تحت الحدیث:  ۴۲۵۱

[4]    مسند امام احمد، مسند البصریین، ۷ / ۲۶۰، حدیث: ۲۰۱۷۱

[5]    ترمذی،کتاب الفتن، باب ما جاء فی فتنۃ الدجال، ۴ / ۱۰۴، حدیث: ۲۲۴۷

[6]    مسلم، کتاب الفتن، باب قصۃ الجساسۃ، ص۱۵۷۷،حدیث: ۲۹۴۳

[7]    ابن ماجہ، ابواب الفتن، باب فتنۃ الدجال،۴ / ۴۰۶، حدیث: ۴۰۷۷

[8]    مسلم، کتاب الفتن، باب ذکر الدجال، ص۱۵۶۷، حدیث: ۲۹۳۳

[9]    مسلم، کتاب الفتن، باب ذکر الدجال،ص۱۵۶۹، حدیث: ۲۹۳۷



Total Pages: 55

Go To