Book Name:Sarkar ka Andaz e Tableegh e Deen

بُزرگ ہمارا پڑوسی ہو اور ہم گمراہی میں زندگی گزاریں۔ چُنانچہ میاں بیوی آپ کے ہاتھ پر مُشَرَّف بہ اسلام ہو گئے ۔([1])اللہ عَزَّ وَجَلَّ کی ان پر رحمت ہواوران کے صدقے ہماری مغفرت ہو۔

اسی طرح ہمارے بزرگانِ دین رَحِمَہُمُ اللّٰہُ الْمُبِینحسنِ اخلاق کا پیکر ہونے کے ساتھ ساتھ صبر وتحمل کا بھی خوب مظاہرہ فرماتے ،کوئی کتنی ہی تکلیف دے انتقام لینے کے بجائے صبروتحمل سے کام لیتے اس ضمن میں حضرتِ سیِّدُنا مالک بن دینارعَلَیْہِ رَحمَۃُ اللّٰہ ِالْغَفَّار کے صبروتحمل کی حکایت ملاحظہ کیجیے چنانچہ تذکرۃ الاولیا میں ہے کہ حضرتِ سَیِّدُنا مالک بن دینارعَلَیْہِ رَحمَۃُ اللّٰہ ِ الْغَفَّار نے کسی یہودی کے مکان کے قریب کرائے پر مکان لے لیا اور آپ کاحُجرہ یہودی کے دروازے سے مُتَّصِل تھا ۔چُنانچہ یہودی نے دشمنی میں ایک ایسا پر نالہ بنوایا جس کے ذریعے پوری گندگی آپ رَحْمَۃُ اللّٰہ ِتعالٰی علیہ کے مکان پر ڈالتا رہتا اور آپ رَحْمَۃُ اللّٰہ ِتعالٰی علیہ کی نماز کی جگہ ناپاک ہو جایا کرتی اور بہت عرصہ تک وہ یہ عمل کرتا رہا لیکن آپ رَحْمَۃُ اللّٰہ ِتعالٰی علیہ نے شکایت نہیں کی۔ ایک دن اس یہودی نے خود ہی آپ رَحْمَۃُ اللّٰہ ِتعالٰی علیہ سے عرض کی کہ میرے پَرنالے کی وجہ سے آپ (رَحْمَۃُ اللّٰہ ِتعالٰی علیہ) كو

 



[1]…… تَذکِرةُ الاولِیا، ص۱۴۲



Total Pages: 32

Go To