Book Name:Rasail e Madani Bahar

کے 63 رسائل مکتبۃ المدینہ سے شائع ہو چکے ہیں ،

        اب171 مَدَنی بہاروں پر مُشتمل مختلف سِلسلوں کے 12 رَسائل کا مَجموعہ بنام ’’رسائلِ مدنی بہار‘‘(جلد اوّل) باقاعدہ کتابی صورت میں پیش کیا جا رہا ہے۔ اللّٰہ  تَعَالٰی سے دُعا ہے کہ ہمیں اِخلاص کی دولت سے مالا مال کرتے ہوئے تادمِ آخِر’’اَمْرٌبِالْمَعْرُوف وَنَہْیٌ عَنِ الْمُنکَر‘‘ کا فریضہ انجام دیتے رہنے کی توفیق مرحمت فرمائے۔

اٰمِیْن بِجَاہِ النَّبِیِّ الْاَمِیْن صَلَّی اللہ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّم

مجلس المدینۃ العلمیۃ (دعوتِ اسلامی)     شعبہ امیرِ اہلِ سنّت

۰۱ ذوالقعدۃ الحرام  ۴۳۴ا  ھ بمطابق 07ستمبر2013ء

ہفتہ واراجتماعات کی اہمیت

       میٹھے میٹھے اسلامی بھائیو!محافلِ ذکرکی بھی کیابات ہے کہ حدیثِ مبارک میں ان کوجنت کے باغات فرمایاگیا۔جیساکہ حضرت جابربن عبداللّٰہ انصاری رَضِیَ اللّٰہُ تَعَالٰی عَنْہ سے مروی ہے فرماتے ہیں کہ ایک دن رسولِ اکرم، نُورِ مُجَسَّم، شاہِ بنی آدم، نبیِّ مُحتَشَم، شافِعِ اُمَمصَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلَیہ وَاٰلہٖ وسَلَّم ہمارے پاس تشریف لائے اور ارشادفرمایا : ’’اے لوگوملائکہ میں سے اللّٰہ  عَزَّوَجَلَّ  کی کچھ ایسی جماعتیں ہیں کہ جوذکرکی مجالس میں داخل ہوتی ہیں اورٹھہرتی ہیں ۔لہٰذاتم جنت کے باغوں میں سے کچھ فائدہ حاصل کر لیا کرو۔ صحابۂ کرام عَلَیْہِمُ الرِّضْوَان نے عرض کی :  یارسول اللّٰہ صَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلَیہ وَاٰلہٖ وسَلَّم جنت کے یہ باغات کہاں ہیں ؟ ارشاد فرمایا :  ذکر کی محافل، مزید فرمایا اپنی صبح وشام اللّٰہ  عَزَّوَجَلَّ  کے ذکرمیں بسر کیا کرو! اور اپنے دل میں اس کو یاد کیا کرو!الخ‘‘

(شعب الایمان جلد۱صفحہ۳۹۷ رقم الحدیث ۵۲۸ دارالکتب العلمیہ بیروت)

        اَلْحَمْدُلِلّٰہ  عَزَّوَجَلَّ  تبلیغِ قراٰن وسنّت کی عالمگیر غیر سیاسی تحریک دعوتِ اسلامی کے تحت موقع کی مناسبت سے مختلف اجتماعات ہوتے رہتے ہیں ۔ مثلاً تین روزہ بین الاقوامی سنّتوں بھرااجتماع ، صوبائی اجتماع، ہفتہ وارسنّتوں بھرا اجتماع، تحصیل اجتماع، اجتماعِ میلاد، اجتماعِ معراج اوراجتماعِ شبِ برأت وغیرہ۔     

ان بابرکت اجتماعات میں تلاوت، نعت، بیان، ذکر، دعا اور صلوۃو سلام کاسلسلہ ہوتا ہے اوریقینایہ سب ذِکرُ اللّٰہمیں داخل ہیں ، لہٰذایہ سنّتوں بھرے اجتماعات از اول تا آخر ذکراللّٰہ ہی پر مشتمل ہوتے ہیں اوران میں سے اکثر سنّتوں بھرے اجتماعات مساجد میں منعقد ہوتے ہیں اور مساجد میں مجالسِ ذکر (سنّتوں بھرے اجتماعات) منعقد کرنا بھی کتنی سعادت مندی کی بات ہے چنانچہ حضرت سیّدنا ابوسعیدخدری رَضِیَ اللّٰہُ تَعَالٰی عَنْہ سیِّدُ الْمُرسَلین، خاتَمُ النَّبِیِّین صَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلَیہ وَاٰلہٖ وسَلَّم سے روایت فرماتے ہیں کہ آپصَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلَیہ وَاٰلہٖ وسَلَّم نے ارشادفرمایا : ’’رب  تَعَالٰی بروزِقیامت ارشاد فرمائے گا :  عنقریب اہلِ محشر جان لیں گے کہ اہلِ کرم کون ہیں ۔نبیٔ کریم صَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلَیہ وَاٰلہٖ وسَلَّم کی بارگاہ میں عرض کی گئی یارسول اللّٰہ صَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلَیہ وَاٰلہٖ وسَلَّم اہلِ کرم کون ہوں گے؟فرمایا :  مساجد میں ذکر کی مجالس (اجتماعات)قائم کرنے والے۔‘‘(شعب الایمان ، ج۱، ص۴۰۱رقم الحدیث ۵۳۵ دارالکتب العلمیہ بیروت)

       میٹھے میٹھے اسلامی بھائیو!دعوتِ اسلامی کے تحت ہرجمعرات کو بعد نمازِ مغرب ملک وبیرون ملک ہونے والے ’’ہفتہ وارسنّتوں بھرے اجتماع‘‘ کو غیر معمولی حیثیت حاصل ہے کہ اس میں بے شمار اسلامی بھائی شرکت کرتے خوب ثواب کماتے اور بیماریوں سے شفاپاتے ہیں ۔اس کے علاوہ اس بابَرَکت اجتماع میں شرکت کرنے والے معاشرے کے انتہائی بگڑے ہوئے افراد کی اصلاح کی کتنی ہی ایسی مَدَنی بہاریں وقوع پذیر ہوتی ہیں کہ ان بہاروں کو سن کردل باغ باغ بلکہ باغِ مدینہ بن جاتا ہے۔وہ لوگ کہ جنہیں کل تک معاشرے میں کوئی عزت کی نگاہ سے نہ دیکھتا تھا اس اجتماع سے حاصل ہونے والی برکات سے معاشرے میں عزت کی زندگی گزارتے ہیں ۔ان مَدَنی بہاروں میں سے کچھ بہاریں قیدِ تحریر میں محفوظ بھی ہو جاتی ہیں اور گاہے گاہے موصول بھی ہوتی رہتی ہیں ۔دعوتِ اسلامی کے علمی وتحقیقی شعبے مجلس اَلْمَدِیْنَۃُ الْعِلْمِیّہ کی طرف سے ان مَدَنی بہاروں میں سے 16مَدَنی بہاریں بنام ’’نادان عاشق‘‘ پیش کرنے کی سعادت حاصل کی جا رہی ہے۔

        اللّٰہ  تَعَالٰی ہمیں ’’اپنی اور ساری دنیا کے لوگوں کی اصلاح کی کوشش‘‘کرنے کے لئے مدنی انعامات پرعمل اور مدنی قافلوں میں سفر کرتے رہنے کی توفیق عطا فرمائے اور دعوت ِ اسلامی کی تمام مجالس بشمول مجلس اَلْمَدِیْنَۃُ الْعِلْمِیّہ کودن پچیسویں رات چھبیسویں ترقی عطافرمائے ۔

اٰمِیْن بِجَاہِ النَّبِیِّ الْاَمِیْن صَلَّی اللہ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّم

شعبہ امیرِاَہلسنّت        مجلس اَلْمَدِیْنَۃُ الْعِلْمِیّہ (دعوتِ اسلامی)

28 شَوالُ الْمُکرَّم ۱۴۳۲ ھ، 27ستمبر  2011ء

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ عَلٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

اَمَّا بَعْدُ فَاَعُوْذُ بِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ط  بِسْمِ اللہِ الرَّحْمٰنِ الرَّ حِیْم ط

دُرُود شریف کی فضیلت

        شیخِ طریقت، امیرِاہلسنّت، بانیٔ دعوت ِاسلامی حضرت علامہ مولانا ابوبلال محمد الیاس عطّارقادری رضوی ضیائی  دَامَتْ بَرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہاپنے سنّتوں بھرے بیان کے تحریری گلدستے ’’زلزلہ اوراس کے اسباب‘‘میں حدیث پاک نقل فرماتے ہیں کہ اللّٰہ  عَزَّوَجَلَّ  کے مَحبوب، دانائے غُیُوب، مُنَزَّہٌ عَنِ الْعُیُوب صَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلَیہ وَاٰلہٖ وسَلَّم کا فرمانِ تقرب نشان ہے : ’’جس نے مجھ پر سو مرتبہ دُرُودِپاک پڑھا اللّٰہ  تَعَالٰی اس کی دونوں آنکھوں کے درمیان لکھ دیتاہے کہ یہ نِفاق اورجہنم کی آگ سے آزاد ہے اور اُسے بروزِقیامت شُہَداء کے ساتھ رکھے گا۔‘‘(مجمع الزوائدج۱۰ص۲۵۲حدیث۱۷۲۹۸)

صَلُّوا عَلَی الْحَبِیب !       صلَّی اللّٰہُ تعالٰی علٰی مُحمَّد

 



Total Pages: 81

Go To