Book Name:Beta Hoto Aisa

کرتا،  منہ کو خوشبو دار کرتااور بلغم کو دُور کرتا ہے۔   ([1])  دوسری روایت میں یہ بھی ہے کہ  (مُنَقّٰی)  غم کو دُور کرتا ہے۔   (اَلطِّبُّ النَّبَوِی لِاَبی نُعَیْم ص۳۷۹حدیث۳۱۹مُلَخَّصًا)

        چھوٹا انگورخشک ہو کر کشمش اوربڑا انگور سوکھ      کر  مُنَقّٰی بنتا ہے۔  مُنَقّٰی  کم وَزن بدن کو موٹا کرتا اور اس کے بیج معدے کی اصلاح کرتے ہیں ۔   انار کے دانوں کے ساتھ  مُنَقّٰی کھانا ہاضمے کے لئے مفید ہے۔   مُنَقّے  کا گُودا پھیپھڑوں کے لئے اِکسیر ہے۔  مُنَقّٰی  دوا بھی ہے اور غذا بھی،  اس کو  چاہیں تو یونہی یا چاہیں تو چھلکا اتار کر مناسب مقدار میں کھا لیجئے ،  مشہور محدث حضرت امام زُہری عَلَیْہِ رَحمَۃُ اللّٰہ ِالْقَوِی  فرماتے ہیں :  جس کو احادیثِ مبارَکہ حفظ کرنے کا شوق ہو وہ  (مناسب مقدار میں ) مُنَقّٰی کھائے۔   ([2]) مُنَقّٰی بیج سمیت بھی کھا سکتے ہیں بلکہ مُنَقّیکے بیج معدے کی اصلاح کرتے ہیں ۔  مُنَقّے  چند گھنٹے پانی میں بھگو کر رکھ دیجئے پھر ان کا چھلکا اُتار کر گود ا نکا ل لیجئے ۔    مُنَقّے  کا گودا پھیپھڑوں کیلئے اِکسیراور پرانی کھانسی کیلئے مفید ہے ۔   یہ گردے اور مثانے کے درد کو مٹاتا ،  جگر اور تلی کو طاقت دیتا ،  پیٹ کو نرم کرتا ،  معدہ مضبوط کرتااور ہاضِمہ دُرُست کرتا ہے۔ 

سُرخ مُنقّے  (Red Currant)

    حضرتِ مولائے کائنات،  علی المرتضیٰ شیرِ خدا کَرَّمَ اللہُ تَعَالٰی وَجْہَہُ الْکَرِیْمسے مروی ہے:  جو روزانہ سرخ مُنَقّے21عدد کھا لیا کرے وہ جسمانی امراض سے محفوظ رہے گا۔    (اَلطِّبُّ النَّبَوِی لِاَبی نُعَیْم ص۷۲۱حدیث۸۱۳)

اِنجیر  (Fig)

        حدیث پاک میں ہے: ’’انجیر کھاؤ! کیونکہ یہ بواسیر کو ختم کرتی اورنِقرِس (یعنی ایک دَرد جو ٹخنوں اور پاؤں کی انگلیوں میں ہوتا ہے)  میں مفید ہے۔   ‘‘ (اَیضًا ص۴۸۵حدیث۴۶۷مُلَخَّصًا)

 {۱}انجیر میں دیگر تمام پھلوں کے مقابلے میں بہتر غذائیت ہے {۲}انجیربواسیر کوختم کر دیتا اور جوڑوں کے دَرد کیلئے مفید ہے {۳}انجیر نہار منہ کھانے کے عجیب و غریب فوائد ہیں  {۴جن کے پیٹ میں بوجھ ہو جاتا ہو وہ ہر بار کھانا کھانے کے بعد تین عدد انجیر کھالیں  {۵}انجیرموٹے پیٹ کو چھوٹا کرتا اور



[1]   اَلطِّبُّ النَّبَوِی لِاَبی نُعَیْم ص۷۱۹ حدیث ۸۰۹مُلَخَّصًا

[2]   الجامع لاَخلاق الراوی ص۴۰۳



Total Pages: 15

Go To