We have moved all non-book items like Speeches, Madani Pearls, Pamphlets, Catalogs etc. in "Pamphlet Library"

Book Name:Sirat ul Jinan jild 4

(5)…اور ایک روایت میں ہے ’’ جو پائوں راہِ خداعَزَّوَجَلَّ میں گرد آلود ہوجائیں وہ جہنم کی آگ پر حرام ہیں۔ (1)

        اللہ  تعالیٰ ہمیں عافیت عطا فرمائے اور اپنی راہ میں آنے والی تکالیف برداشت کرنے کی ہمت اور توفیق نصیب فرمائے،اٰمین۔

وَلَایُنۡفِقُوۡنَ نَفَقَۃً صَغِیۡرَۃً وَّلَاکَبِیۡرَۃً وَّلَا یَقْطَعُوۡنَ وَادِیًا اِلَّا کُتِبَ لَہُمْ لِیَجْزِیَہُمُ اللہُ اَحْسَنَ مَا کَانُوۡا یَعْمَلُوۡنَ ﴿۱۲۱

ترجمۂکنزالایمان: اور جو کچھ خرچ کرتے ہیں چھوٹا یا بڑا اور جو نالا طے کرتے ہیں سب ان کے لیے لکھا جاتا ہے تاکہ اللہ ان کے سب سے بہتر کاموں کا انہیں صلہ دے۔

ترجمۂکنزُالعِرفان:اور جو کچھ تھوڑا اور زیادہ وہ خرچ کرتے ہیں اور جو وادی وہ طے کرتے ہیں سب ان کے لیے لکھا جاتا ہے تاکہ اللہ ان کے بہتر کاموں کا انہیں بدلہ عطا فرمائے۔

{ وَلَایُنۡفِقُوۡنَ نَفَقَۃً صَغِیۡرَۃً وَّلَاکَبِیۡرَۃً:اور جو کچھ تھوڑا اور زیادہ وہ خرچ کرتے ہیں۔} آیت کا خلاصہ یہ ہے کہ جو کچھ تھوڑا  مثلاً ایک کھجور یا زیادہ وہ خرچ کرتے ہیں  جیسا کہ حضرت عثمان غنی رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُ نے غزوۂ تبوک میں خرچ کیا اور اپنے سفر میں آنے اور جانے کے دوران جو وادی وہ طے کرتے ہیں تو ان کا راہِ خدا میں خرچ کرنا اور وادیاں عبور کرنا سب ان کے لیے لکھا جاتا ہے تاکہ اللہ عَزَّوَجَلَّ ان کے کاموں کا انہیں بدلہ عطا فرمائے۔ اس آیت سے جہاد کی فضیلت اور اس کابہترین عمل ہونا ثابت ہوا۔ (2)

راہِ خدا میں جہاد کرنے اور مال خرچ کرنے کے فضائل

        جہاد میں مال خرچ کرنے اور جہاد میں شریک ہونے کے فضائل بکثرت اَحادیث میں مذکور ہیں ، ان میں سے 5 اَحادیث یہاں بیان کی جاتی ہیں۔

ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ

1ترمذی، کتاب فضائل الجہاد، باب ما جاء فی فضل من اغتبرّت قدماہ فی سبیل اللہ، ۳/۲۳۵، الحدیث: ۱۶۳۸۔

2خازن، التوبۃ، تحت الآیۃ: ۱۲۱، ۲/۲۹۴، مدارک، التوبۃ، تحت الآیۃ: ۱۲۱، ص۴۵۹، ملتقطاً۔