Book Name:Madani Wasiyat Nama

ہو یا اِس سے معمولی زیادہ  ([1])    {۱۱}  بعدِدفن قبرپر پانی چِھڑکنا مسنون ہے  ([2])  {۱۲}   اس کے علاوہ بعد میں  پودے وغیرہ کو پانی دینے کی غرض سے چھڑکیں  تو جائزہے  {۱۳}   بعض لوگ اپنے عزیز کیقَبْر پر بِلا مقصد ِصحیح محض رسمی طور پر پانی چِھڑکتے ہیں  یہ اِسراف و ناجائز ہے،  فتاویٰ رضویہ شریف جلد9 صَفْحَہ373 پر ہے:بے حاجت  (قبرپر ) پانی کا ڈالناضائع کرناہے اورپانی ضائع کرناجائز نہیں   {۱۴}  دَفْن کے بعد سرہانے الٓمّٓتا مُفْلِحُوْنَ اور قدموں  کی طرف اٰمَنَ الرَّسُوْلُ سے ختم سورہ تک پڑھنا مستحب ہے  ([3])  {۱۵}  تلقین کیجئے۔   (طریقہ صفحہ6 کے حاشِیہ پر مُلاحظہ فرمائیے)  {۱۶}   قبر پر پھول ڈالنابہترہے کہ جب تک تررہیں گے تسبیح کریں گے اورمیِّت کادل بہلے گا ([4])  {۱۷} قبر کے سرہانے قِبلہ رُو کھڑے ہوکر اذان دیجئے۔   ([5])     



[1]      ایضاًص۱۶۸،

[2]      فتاوٰی رضویہ مُخَرَّجہ ج۹ص۳۷۳،

[3]      جوہرہ ص۱۴۱، بہارِ شریعت ج۱ص۸۴۶،

[4]      رَدُّالْمُحتارج ۳ص ۱۸۴، 

[5]      ماخوذ از فتاوٰی رضویہ مُخَرَّجہ ج۵ ص۷۰ ۳



Total Pages: 7

Go To