Book Name:Fatawa Razawiyya jild 29

 

 

 

 

 

خواب

 

مسئلہ ۲۱:                 ازکانپور محلہ مولگنج مرسلہ الدین صاحب امام مسجد شکر اﷲ صاحب سوداگر      ۱۳ ربیع الاخر شریف

خواب کیا چیز ہے؟

الجواب:

خواب چار۴ قسم ہے:

ایك حدیث نفس کہ دن میں جو خیالات قلب پر غالب رہے جب سویا اور اس طرف سے حواس معطل ہوئے عالم مثال بقدر استعداد منکشف ہوا انہیں تخیلات کی شکلیں سامنے آئیں یہ خواب مہمل و بے معنی ہے اور اس میں داخل ہے وہ جو کسی خلط کے غلبہ اس کے مناسبات نظر آتے ہیں مثلًا صفراوی آگ دیکھے بلغمی پانی۔

دوسرا خواب القائے شیطان ہے اور وہ اکثر وحشتناك ہوتا ہے شیطان آدمی کو ڈراتا یا خواب میں اس کے ساتھ کھیلتا ہے اس کو فرمایا کہ کسی سے ذکر نہ کرو کہ تمہیں ضرر نہ دے۔ایسا خواب دیکھے تو بائیں طرف تین بار تھوك دے اور اعوذ پڑھے اور بہتر یہ ہے کہ وضو کرکے دو رکعت نفل پڑھے۔

تیسرا خواب القائے فرشتہ ہوتا ہے اس سے گزشتہ و موجودہ و آئندہ غیب ظاہر ہوتے ہیں مگر اکثر پردہ تاویل قریب یا بعید میں و لہذا محتاج تعبیر ہوتا ہے۔


 

 



Total Pages: 750

Go To