Book Name:Fatawa Razawiyya jild 29

 

 

 

 

 

وعظ و تبلیغ

 

مسئلہ ۱۴:                ازسہسرام ضلع گیا محلہ پٹیاں ٹولی عرف نیم کالے خان مرسلہ حکیم سراج الدین احمد صاحب                ۱۷ شوال ۱۳۳۵ھ

دیوبندی سہارنپوری نانوتوی والہ آبادی وغیر ہم واعظین مدارس و مساجد کی تعمیر و تحفظ میں بلا ترجیح یکدیگر جو کچھ اقوالِ مختلفہ بیان کرتے ہیں کہاں تك حق بجانب ہے تاوقتیکہ بدعت واجب مندوب مباح حرام مکروہ اور بدعت کی وجہ حسن و قبح اور فرق درمیان بدعت و مباح و تخصیص حدیثیں۔

(۱)من سنّ سنّۃ حسنۃ ومن سنّ سنۃ سیّئۃ[1]۔

(۲)من احدث فی امرنا ھذا مالیس منہ فہوردّ[2]۔

(۳)من ابتدع بدعۃ ضلالۃ لایرضا ھا اﷲ ورسولہ[3]۔

جس نے اچھا طریقہ ایجاد کیا اور جس نے بُرا طریقہ ایجاد کیا(ت)

جو شخص ہمارے دین میں کوئی نئی نکالے وہ مردود ہے۔(ت)

جس نے کوئی ایسی نئی بات نکالی جو بُری ہے جسے اﷲ و رسول پسند نہیں فرماتے۔(ت) 

 


 

 



[1] مسند الامام احمد بن حنبل المکتب الاسلامی بیروت۴/ ۳۶۱ وصحیح مسلم کتاب العلم قدیمی کتب خانہ کراچی ۲/۳۴۱

[2] صحیح مسلم کتاب الاقضیۃ باب نقض الاحکام الباطلۃ الخ قدیمی کتب خانہ کراچی ۲/ ۷۷

[3] جامع الترمذی کتاب العلم باب الاخذ بالسنۃ واجتناب البدعۃ امین کمپنی دہلی ۲/ ۹۲



Total Pages: 750

Go To