Book Name:Fatawa Razawiyya jild 19

 

 

 

 

 

 

 

کتاب الاکراہ

(اکراہ کا بیان)

 

مسئلہ ۲۲۹ تا ۲۳۱:                 ا زبریلی ساہوکارہ مرسلہ شیام سندرلال چیئرمین                            ۲ ربیع الثانی ۱۳۳۷ھ

کیا فرماتے ہیں علمائے دین ومفتیان شرع متین ان مسائل میں کہ زید نے ایك بیعنامہ بنام بکر تصدیق کرادیا نقل شامل سوال ہے مگر زر ثمن کالین دین نہیں ہوا صرف اقرار ہوا ہے۔مگر اس کے بعد ایك دعوٰی تنسیخ ودستاویز مذکورہ کا زید نےکچہری میں کیا،دعوی اور جواب دعوی بھی شامل سوال ہے تو:

(۱)کیا حسب بیان مدعی مندرجہ دعوٰی بصور ت بیع مکرہ کی ہے،اگر ہے تو کیا حکم ہے؟

(۲)مکرہ ہونے کے واسطے بالفعل رجسٹری کے وقت داب ناجائز کا موجود ہونا ضرور ہے یا پیشتر سے تخویف اور آئندہ کے لئے ضرر شدید کا اندیشہ صحیح کافی ہے؟

(۳)ایسی صورت میں جبکہ رجسٹری میں زرثمن نہیں دیا گیا تو مشتری کے ذمہ حوالگی زر ثمن کا بار ثبوت ہے یانہیں؟ بینوا توجروا

الجواب:

(۱)عرضی دعوٰی میں مدعا علیہ کا مدعی کو مدت طویل تك اپنے مکان میں محبوس رکھنا اور کسی سے نہ ملنے دینا اور ناجائز داب کا ذکر ہے داب کا بیان نہیں اور زبانی بیان سائلان یہ ہوا کہ قتل کی تخویف کی اور مدعی اسے باور کرتا تھا،یہ بیانات اگر واقعی ہیں تو وہ بلا شبہ بیع مکرہ اورفاسد ہے۔اور


 

 



Total Pages: 692

Go To