Book Name:Fatawa Razawiyya jild 16

الجواب:

زید کاقول محض باطل وخلاف شرع ہے مسجد کے لئے چھت،منارہ،دیواریں کوئی چیزلازم نہیں،اس میں تو منبر محراب موجود ہے،یہ بھی نہ ہوتا تو بھی مسجدیت میں خلل نہیں۔مسجد صرف اس زمین کا نام ہے جو نماز کیلئے وقف ہو یہاں تك کہ اگر کوئی شخص اپنی نری خالی زمین مسجد کو دے مسجد ہوجائے گی،مسجد کا احترام اس کےلئے فرض ہوجائے گا۔فتاوٰی عالمگیری میں ہے:

رجل لہ ساحۃ لابناء فیہا امر قوما ان یصلوافیہا بجماعۃ ابدا او امرھم بالصلٰوۃ مطلقًا ونوی

کسی شخص کی خالی زمین ہے جس میں عمارت نہیں اس نے لوگوں کو کہا کہ اس میں ہمیشہ نماز باجماعت پڑھاکرو،یایوں کہا کہ اس میں نماز پڑھو،اور نیت

 


 

 



Total Pages: 631

Go To