Book Name:Fatawa Razawiyya jild 16

 

 

 

 

فہرست مضامین مفصّل

کتاب الشرکۃ

 

عرف ظاہر پر عمل واجب ہے۔

۹۱

جن لوگوں کا مال اس طرح مل گیا کہ تمیز مشکل ہے اور کچھ لوگ عدم امتیاز کی وجہ سے اپنا حصہ لینے سے انکار کریں تو بقیہ شرکاء اپنا حصہ لے کر بقیہ فقیروں کودے دیں۔

۸۹

عرف اعظم دلائل شرعیہ سے ہے۔

۹۱

مال شرکت سے متعلق ایك سوال۔

۸۹

جو عرف میں معروف ہو وہ مشروط شرعی کی طرح ہوتا ہے۔

۹۱

مشترك دکان کی آمدنی میں شرکاء بحصہ مساوی شریك ہوں گے۔

۸۹

زید نے عمرو کو کچھ روپیہ دیا اور کہا کہ اس کو خرچ کر،یا اپنی حاجت میں اٹھا،یا جہاد کر،تو قرض قرار دیاجائیگا۔

۹۲

مشترکہ ملك میں سے ایك شریك دوسرے شریك کی اجازت سے کچھ رقم لے گیا تو اگر کچھ باقی واپس ہو ا تو دونوں شرکاء بحصہ مساوی مالك ہونگے۔

۹۰

عو رت نے شو ہر کو دیاکہ کپڑا بنا کر پہن،تو ہبہ قرار دیا جا ئے گا۔

۹۲

قر ض،ہبہ اور ا با حت کا فرق۔

۹۰

طالبعلم کو لکڑیاں وغیرہ دیں کہ اپنی کتابوں میں صرف کیجئے،ہبہ قرار پائے گا۔

۹۲

اباحت بعد موت مبیح باطل ہوجاتی ہے۔

۹۰

جس عاریۃ کو ہلاك کرکے انتفاع حاصل کیا،قرض قرار دیا جائے گا۔

۹۲

مشترك مال میں ہر فریق کےلئے جو مباح کردیا گیا اس کا تاوان نہیں۔

۹۱

مدارعرف پر ہے۔

۹۲

 

 

جس معاملہ میں قرض معروف ہوقرض قرار دیا جائے اور جس میں ہبہ وہ ہبہ ہے۔

۹۳

 


 

 



Total Pages: 631

Go To