$header_html

Book Name:Jame Ul Ahadees Jild 1

٭     کتاب العلل لا بن  المدینی،                           م  ۲۲۴

٭      علل الحدیث  لا بن ابی حاتم،                         م ۳۲۷

٭      العلل و معرفۃ الرجال لا حمد بن حنبل ،               م ۲۴۱

٭      العلل الکبیر و العلل الصغیر  للترمذی ،                 م ۲۷۰

 ٭     علل الواردۃ  فی الاحادیث النبویہ  للدار قطنی ،          م ۳۸۵

٭     کتاب  العلل للخلال ، (۷۴)                       م۳۱۱

مخالفت ثقات

        راوی  پر طعن  کا سبب  ثقات کی مخالفت بھی  ہے جسکی سات صورتیں ہیں ۔  لہذا  سات عنوان اسکے  لئے وضع  کئے  گئے  ہیں جو مندرجہ  ذیل  ہیں: ۔ 

       مدرج ،  مقلوب ،  المزید فی متصل المسانید ، مضطرب،  مصحف ، شاذ ،  منکر ، ۔

       اجمالا  یوں  سمجھئے کہ  مخالفت  ثقات  اسناد یا متن میں تبدیلی  یا اضافہ کی صورت  میں ہو تو  مدرج ہے ۔ تقدیم  و تاخیر  میں ہو تو مقلوب ہے ۔  معتبر سند  میں  راوی  کا اضافہ  ہو تو  المزید  فی متصل  الاسانید ہے ۔ اگر راوی  میں  تبدیلی  یا متن میں ایسا  اختلاف  جو تعارض کا سبب ہو اور کوئی  وجہ  ترجیح نہ ہو  تو مضطرب  ہے ۔  اگر حروف میں تبدیلی ہو تو مصحف ہے ۔  ثقہ اگر اوثق  کی مخالفت کرے تو شاذ اور اسکے مقابل محفوظ  ہے ۔  ضعیف اگر ثقہ کی مخالفت کرے  تو منکر  اور اسکے  مقابل  معروف ہے۔

 مدرج

 تعریف۔ جس حدیث  میں  غیر کو داخل  کر دیا جائے ۔

                     دو قسمیں ہیں:۔

        Xمدرج الاسناد               X  مدرج المتن

 تعریف  مدرج الاسناد ۔  وہ حدیث  جسکی سند کا وسط یا سیاق  بدل  دیاجائے ۔

       اسکی  متعدد صورتیں ہیں لیکن اجمالی  کلام یہ ہے

٭      راوی  کو ایک  حدیث  چند شیوخ  سے پہونچی  جنہوں نے اس  حدیث کو  مختلف سندوں  سے بیان کیا  تھا ، پھر 



Total Pages: 604

Go To
$footer_html