Book Name:Jame Ul Ahadees Jild 1

کثیر ، ابو بشربن سیار،محمد بن مہدی مروزی اور مہدی بن میمون کے بارے میں خاتم الخفاظ حضرت علامہ ابن حجر عسقلانی کا قول نقل کیا کہ یہ مجہول ہیں اور اسی وجہ سے علامہ ابن حجر اس حدیث کو منکر بلکہ موضوع کہتے ہیں ۔

       اب امام احمد رضا محدث بریلوی کی باادب تنقید وتحقیق ملاحظہ فرمائیں جس کا خلاصہ کچھ اس طرح ہے ۔

       اللہ تعالیٰ حافظ ابن حجر پر رحم فرمائے کہ انہوں نے اس حدیث کو موضوع کیسے کہدیا جبکہ اس کی سند میں کوئی وضاع ہے نہ کوئی متھم بالوضع ،نہ کوئی کذاب ہے نہ متھم بالکذب ،نیز اس کا مفہوم بھی عقلاًوشرعاً محال نہیں ، محض راوی کے مجہول ہونے سے حدیث موضوع نہیں ہوجاتی کہ فضائل میں بھی قابل استدلال نہ رہے ۔

       حالانکہ خودحافظ ابن حجر نے ’’ القول المسدد‘‘ میں ایسی دو حدیثیں ، جس کے راوی مجہول ، مضطرب الحدیث ،کثیر الخطاء ، فاحش الوہم ہیں ، یاغلط احادیث منسوب کرنے میں پیش پیش ہیں، ان کو موضوع نہیں کہا بلکہ یوں فرمایا کہ یہاں کوئی ایسی چیز نہیں جو ان احادیث کے موضوع ہونے کا فیصلہ کرے ، بلکہ دوسری حدیث کے لئے تو یہ فرمایا کہ اس حدیث میں تو ایسا کوئی مضمون بھی نہیں جسے عقل وشرع محال قرار دیتی ہو ،اور یہ احادیث باب فضائل کی ہیں لہذا

 مقبول ۔

       اب امام احمد رضا کا فیصلہ کن بیان ملاحظہ ہو:۔

       ’’ یہ ہی بات عمامہ والی حدیث میں کیوں نہیں کہی گئی حالانکہ یہ بھی باب فضائل سے ہے اور اس میں بھی کوئی بات ایسی نہیں جو شرعاً وعقلاً محال ہو بلکہ اس حدیث کے راویوں میں تو اس طرح کی وجوہ  طعن بھی منقول نہیں جو ابن حجر کی پیش کردہ ہیں۔ ‘‘ 

       غور فرمایئے ، امام احمد رضا  محدث بریلوی نے کیسی نقد وتنقید فرمائی اور خودانہیں کے قول سے اپنے مدعا کا ثبوت فراہم کردیا لیکن نہایت مودبانہ طور پر ۔

 ٭    حالت سفرمیں نماز ظہرو عصر اور مغرب وعشاء کو حقیقی طور پر جمع کرنا ہمارے یہاں عرفہ و مزدلفہ کے  سوا جائز نہیں ، غیر مقلدین کے شیخ الکل میاں نذیر حسین دہلوی نے معیار الحق نامی کتاب لکھ کر احناف کی مستدل احادیث صحاح کو رد کرنے کی ناکام کوشش کی تو امام احمد رضا نے حاجزالبحرین نامی ایک عظیم کتاب تحریر فرماکر میاں جی کے مزعومات باطلہ کی دھجیاں اڑادیں ، اور دعوی محدثی کو خاک میں ملادیا ۔

       پوری کتاب اسماء الرجال ، جرح وتعدیل اور تحقیق وتنقیح کا عظیم شاہ کار ہے ، ملاجی کی

 



Total Pages: 604

Go To