$header_html

Book Name:Jame Ul Ahadees Jild 1

نئے افق کی تلاش میں رواں دواں ہوجاتا ہے ۔ بقول کسے :۔

یہاں  ہر گام گام اولیں ہے         جنوں کی کوئی منزل ہی نہیں ہے

       اصل کتاب میںبہت ساری حدیثوں کا ترجمہ نہیں تھا ،یا موقع کی مناسبت سے اعلیٰ حضرت قدس سرہ نے ترجمہ لکھا اور اصل عربی متن تحریر نہیں کیا تھا ۔ ان سب  احادیث کو اصل کتابوں سے نقل کر کے ترجمہ ان کے ساتھ ضم کر دیا  ہے جو نہایت دشوار گزار مرحلہ تھا ۔ ایسا دو چار جگہ نہیں بلکہ پوری کتاب میں پانچ چھہ سو مقامات پر ہے جسے مولانا نے مکمل کر دیا اور اس پر امتیاز

کی علامت بھی لگادی یعنی  ’’۱۲م‘‘

       اعلیحضرت رضی اللہ تعالیٰ عنہ کی تحریروں کے انبار  میں جہاں جہاں احادیث کے مضمون سے متعلق کوئی تحریر ملی ، اسکو متعلقہ حدیثوں کے ذیل میں درج کر دیا جس سے کتاب کی افادیت میں بے پناہ اضافہ ہوگیا ۔  اور جس سے عوام و خواص دونوں ہی حسب استعداد استفادہ کر سکیں گے ۔ اس پر مستز اد  یہ کہ کتاب پر ایک مبسوط مقدمہ تحریر کیا  جس میں احادیث نبوی کا تعارف ،   اس کی استنادی حیثیت سے بحث ، مستشرقین کے شبہات کے مفصل جوابات ، تدوین  حدیث اور اس کی حفاظت  اور روایت کی تاریخ ،خادمان حدیث ائمۂ مجتہدین اور ائمۂ احادیث کی سوانح حیات ، الغرض اس کتاب کی تزئین و تکمیل میں مولانا سلمہ نے اپنی تمام توانائیاں صرف کیں ہیں  ۔  مولیٰ تعالی اسے قبول فرمائے اور مقبول انام بنائے ، اور مرتب کو دارین میںبہتر جزا دے ۔ آمین

                                         عبدالمنان اعظمی

                                          شمس العلوم گھوسی مؤ(یو پی)

                                         ۷؍مئی                                                                     ۲۰۰۱؁ء ۱۲؍ صفر  ۱۴۲۱؁ھ

 تقریظ جلیل

       فقیہ  ملت حضرت  علامہ مفتی  جلال الدین احمد صاحب  قبلہ  امجدی مد ظلہ  العالی

              بانی  و ناظم  مرکز  تربیت افتاء و ارشد العلوم اوجھا گنج  بستی

 



Total Pages: 604

Go To
$footer_html