Book Name:Jame Ul Ahadees Jild 1

۵۔     حدیث میں اضطراب ہوتو متن یاسند کے اضطراب کو بیان کردیتے ہیں ۔

 ۶۔   حدیث منقطع کے انقطاع اور بعض اوقات وجہ انقطاع کی صراحت کرتے ہیں ۔

۷۔     حدیث غیر محفوظ اور شاذ کی صراحت کرتے ہیں اور کبھی وجہ شذوذ بھی بیان کرتے ہیں۔

 ۸۔    حدیث منکر کی صراحت اور بعض مقامات پر وجہ بھی بیان کرتے ہیں ۔

 ۹۔   حدیث صحیح اگر دوسری سند سے مدرج ہو تو اسکی وضاحت بھی کرتے ہیں ۔

۱۰۔  حدیث مرفوع اگر درحقیقت موقوف ہوتواسکی صراحت بھی کرتے ہیں ۔

       ان کے علاوہ دیگر اسلوب بھی اختیار کئے ہیں جنکو تفصیل سے علامہ غلام رسول سعید ی

نے مقدمہ ترمذی مترجم میں بیان کیا ہے ۔

       جامع ترمذی کی جملہ احادیث کی تعداد (۳۹۵۶) بتائی جاتی ہے اور توابع وشواہد کو

جداکرکے احادیث مقصود ہ کی تعداد(۱۳۸۵) رہ جاتی ہے ۔(۲۱)

 

 

vbvbvbvbvbvbv

vbvbvbvbvbv

امام نسائی

 نام ونسب :۔نام ،احمد ۔کنیت ،ابو عبدالرحمن ۔والد کا نام ،شعیب ہے اور سلسلہ اس طرح

بیان کیاجاتاہے ۔احمد بن شعیب بن علی بن بحربن سنان بن دینار نسائی ۔

 ولادت وتعلیم ۔آپکی ولادت ۲۱۵ھ میں خراسان کے ایک مشہور شہرنساء میں ہوئی ،ابتدائی

تعلیم اپنے شہر کے اساتذہ سے حاصل کی ، اسکے بعد ۱۵؍سال کی عمر ۲۳۰ھ میں سب سے پہلے قتیبہ بن سعید بلخی کی خدمت میں حاضرہوئے اور انکی خدمت میں ایک سال دوماہ رہکر علم حدیث

حاصل کیا ۔

 



Total Pages: 604

Go To