Book Name:Jame Ul Ahadees Jild 1

زندگی کے ایام گذارے ،فرماتے ہیں ۔

       خداوند قدوس کی قسم ! میں بھوک سے جگرتھام کر زمین پر بیٹھ جاتا اور پیٹ پر پتھر باندھ لیتا تھا ،منبررسول اور حجرئہ مقدسہ کے درمیان کبھی چکراکر گرپڑتا ،لوگ سمجھتے میں پاگل ہوں حالانکہ یہ صرف بھوک کا اثر تھا ،ان جانفشانیوں کے عالم میں بھی آپ نے حضور کے شب وروز

کو اپنے قلب وذھن میں  محفوظ کرلینے کا مشن جاری رکھا ۔

       اصحاب صفہ میں حضرت ابوہریرہ ہی تنہانہ تھے بلکہ یہ تعداد مختلف رہتی اورکبھی کبھی ستر تک جاپہونچتی تھی ۔ان حضرات کا مشغلہ ہی یہ تھا کہ احادیث سنیں اور یاد کریں ، سیرت وکردار

ملاحظہ کریں اوراس کو اپنے لئے نمونہ عمل بنالیں اوردوسروں کو اسکی تبلیغ کریں ۔

        انکے  علاوہ ہردن آنے جانے والے صحابہ کرام کی تعداد کوکون شمار کرسکتا ہے ، گروپیش پروانوں کا ہجوم رہتا اورماہ رسالت اپنی ضیاء پاشیوں سے سب کو مجلی ومصفی فرماتا ۔ بعض حضرات روزانہ حاضری دینا لازم جانتے تھے اور بعض نے ایک دن بیچ حاضری کا التزام کرلیا تھا ،لیکن انہوں نے ہردن کی مجلس سے استفادہ کا طریقہ یوں اپنایا تھا کہ دواسلامی بھائی آپس میں معاہدہ کرتے کہ آج آپ بارگاہ رسالت میں حاضر رہنا اور میں معاش کی تلاش میں رہونگا پھر کل میری باری ہوگی ۔ شب میں ایک دوسرے کو اپنے مشاہدات سے باخبر کرتا اس طرح دن بھرکی

معلومات میں ایک دوسرے کو اپناشریک بنالیتا تھا ۔

       فاروق اعظم رضی اللہ تعالیٰ عنہ بھی انہی حضرات میں  سے ایک ہیں فرماتے ہیں ۔

       کنت انا وجارلی من الانصار فی بنی امیۃ بن زید وھی من عوالی المدینۃ، وکنا نتناوب النزول علی رسول اللہ صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم ینزل یوما وانزل

یوما،فاذا نزلت جئتہ بخیر ذلک الیوم من الوحی وغیرہ ،واذانزل فعل مثل ذلک۔ (۳۸)

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۳۸۔    الجامع الصحیح  للبخاری،             باب التناؤب  فی العلم،                  ۱/۱۹

 ۳۸۔     الجامع الصحیح  للبخاری،             باب التناؤب  فی العلم،                 ۱/۱۹

       میں اور میراایک ا نصاری پڑوسی عوالی مدینہ میں بنوامیہ بن زید کی بستی میں رہتے تھے، ہم دونوں حضور کی خدمت میں بار ی باری حاضر ہوتے ،جس دن میں حاضری دیتا توانکو وحی

وغیرہ کے حالات سے باخبر کرتا اوردوسرے دن وہ آتے تو مجھ سے حالات بیان کردیتے ۔

 



Total Pages: 604

Go To