Book Name:Mahboob e Attar ki 122 Hikayaat

بانیٔ دعوتِ اسلامی حضرت علامہ مولانا ابوبلال محمد الیاس عطارؔ قادری دامت برکاتہم العالیہ سے ملاقات کی سعادت نصیب ہوگئی جس سے مجھے خوب مَدَنی کام کرنے کا جذبہ ملا اور میں نے ساری زندگی دعوتِ اسلامی سے وابستہ رہنے کا عزمِ مصمم کر لیا۔ایک خاص بات یہ بھی ہے کہ حاجی زم زم رضاعطاری عَلَیْہِ رَحمَۃُ اللہِ الباری کی صحبت کی برکت سے میں نے آنکھوں کا قفلِ مدینہ لگایا اور لکھ کر بات کرنے کی کوشش شروع کر دی ۔ان کی شفقتوں کے نتیجے میں میں نے دعوتِ اسلامی کی مجلسِ ڈاکٹرز میں کابینہ سطح پر مَدَنی کام کرنے کی سعادت پائی اور ترقی پاتے پاتے آج میں پاکستان سطح کی مجلسِ ڈاکٹرز (دعوتِ اسلامی)کے خادم (نگران) کے طور پر ڈاکٹر اسلامی بھائیوں میں مَدَنی کاموں کی دُھومیں مچانے کے لئے کوشاں ہوں۔امیرِ اہلسنّت دامت برکاتہم العالیہ کی خواہش کے احترام میں یک مشت 12ماہ مَدَنی قافلے میں سفر کی بھی نیت کرچکاہوں۔ میری تمام اسلامی بھائیوں بالخصوص ڈاکٹر اسلامی بھائیوں سے مَدَنی التجاء ہے کہ آپ بھی دعوتِ اسلامی کے مُشکبار مدنی ماحول سے وابستہ ہوجائیے ، اِنْ شَآءَ اللہ عَزَّ  وَجَلَّآپ کی زندگی میں مَدَنی انقلاب برپاہوجائے گا ، آپ کے دل کو وہ سکون ملے گا جو شاید پہلے کبھی نہ ملا ہو گا، گناہوں سے بچنے کا ذہن بنے گا اور گھر کا ماحول بھی مدینہ مدینہ ہوجائے گا ۔

صَلُّوا عَلَی الْحَبِیب !                                                      صلَّی اللہُ تعالٰی علٰی محمَّد

انفِرادی کوشِش کی اَہمیّت

        میٹھے میٹھے اسلامی بھائیو! یقینا  نیکی کی دعوت کے کام میں اِنفرادی کوشش


 

 



Total Pages: 208

Go To