Book Name:Rehnuma e Mudarriseen

حُرُوف میں واضح فرق کروائیے ۔ ٭  تنوین کو معروف پڑھائیے نہ کہ مجہول بالخصوص زیر اورپیش کی تنوین کو معروف ادا کروائیے ۔ ٭ اس سبق کو ہجے اور رواں دونوں طریقوں سے پڑھائیے ۔

امتحان کی ترکیب : دی گئی ہدایات کے مطابق اس سبق کو پڑھاتے ہوئے امتحان کی ترکیب اس طرح بنائیے کہ طالبِ علم سے نیچے سے اوپر " " ،  اوپر سے نیچے  "   " ، دائیں سے بائیں " "  اور بائیں سے دائیں " " سنیں نیز مختلف حُرُوف پر اُنگلی رکھ کرتنوین کا امتحان لیجئے کہ ان کو دوزبر ، دو زیر، دو پیش کی پہچان ہو گئی ہے یا نہیں ؟ کہیں ایسا نہ ہو کہ صرف رٹا لگا ہوا ہو اورپہچان نہ ہوئی ہو اور یہ بھی دیکھ لیجئے کہ طالبِ علم تنوین اور اَلفاظ کی ادائیگی میں فرق کر رہا ہے یا نہیں ؟تنوین والے سبق (نمبر۵)میں سے جس حَرْف پر اُنگلی رکھ کر امتحان لیں وہی حَرْف حرکات والے سبق(نمبر۳) میں سے بھی پوچھیں ۔  مثلاً  با دو زبر بً  اور  با زبربَ  وغیرہ ۔

مَد َنی التجا : اگراس سبق میں مدنی منّے کی کوئی کمزوری دیکھیں تو اُسے لازِمی دُور فرمائیے ۔   

 

طریقۂ تَدْرِیس

ترتیب : اس سبق میں حرکات و تنوین کی مشق دیتے ہوئے سب سے پہلے قرآنِ پاک کے وہ کلمات دئیے گئے ہیں جن کے تینوں حُرُوف پر زبر کی حَرَکت ہے پھر وہ کلمات جن کے تینوں حُرُوف کے نیچے زیر کی حَرَکت اوراس کے بعد وہ کلمات دئیے گئے ہیں جن کے تینوں حُرُوف پر پیش کی حَرَکت ہے ۔ اور حرکات کے ردّ وبدل سے مختلف کلمات کی مشق دی گئی ہے تاکہ مدنی منّے حرکات کی ادائیگی پُختہ کر سکیں ۔ نیززبر کی تنوین پھر زیر پھر پیش کی تنوین اور آخرمیں گول تا (ۃ) پر زبر ، زیر اور پیش کی تنوین کی مثالیں بھی دی گئیں ہیں ۔

قواعِد سمجھانااورسبق پڑھانا :

             مُدَرِّس کو چاہیے کہ٭ مدنی منّے کو ہجے کرنے اور کلمہ بنانے کا طریقہ سمجھائے مثلاً لفظ  خَلَقَہے ، مدنی منّے سے پوچھیں پہلا حَرْف کیا ہے اور یہ کیسے پڑھا جائے گا؟ مدنی منّا پڑھے خا زبر خَ ۔  خ کی پُرآواز اچھی طرح مدنی منّے کو ذہن نشین کروائیے ۔ پھر آگے والا حَرْف پڑھوائیے لام زبر لَ ۔ ل کی باریک آواز اچھی طرح مدنی منّے کو ذہن نشین کروائیے ۔  پھر خ اور ل دونوں کی آوازیں مدنی منّے سے جڑوائیے :  خَلَ بنا  پھر قاف زبر قَ پڑھا کر تینوں کی آوازیں ملوائیے تو خَلَقَ بن گیا ۔  ٭اگر مدنی منّا حُرُوف یا حرکات و تنوین کو صحیح اور کامل طریقے سے نہ بتائے تو دوبارہ پچھلاسبق سمجھا کر اس کو صحیح پہچان کروائیے ۔ ٭ سبق ہجوں کے ساتھ پڑھانے کے بعد چند مرتبہ رواں بھی پڑھائیے تاکہ مدنی منّے میں رواں پڑھنے کی صلاحیت بھی پیدا ہو ۔ ٭ سبق پڑھاتے وقت اس بات کا پورا خیال رکھیے کہ مدنی منّا ان کو دُرُست تَلَفُّظ کے ساتھ ادا کرے ۔ ٭ جلد بازی کے ساتھ ہجے نہ کروائیے یعنی صَدَقَ کو صا د زبر  صَ،  دال زبر  دَ   صَدَ ، قا ف زبر  قَ  صَدَقَ بلکہ ہجے کرواتے وقت ہر ہر حَرْف اور حَرَکت کی مکمل ادائیگی کروائیے ۔ ٭اس بات کا خصوصی خیال رکھا جائے کہ مدنی منّا اس سبق کو زبانی یعنی بغیر دیکھے اس انداز سے رواں نہ پڑھے کہ حرکات دراز ہو جائیں بلکہ ہر کلمے کی پہچان کرتے ہوئے مَخَارِج اور قواعِد کی دُرُست ادائیگی کرے ۔

 امتحان کی ترکیب  : دی گئی ہدایات کے مطابق اس سبق کو پڑھاتے ہوئے امتحان کی ترکیب اس طرح بنائیے کہ مدنی منّے سے نیچے سے اوپر  "  "  ، اوپر سے نیچے  "   " ، دائیں سے بائیں " "  اور بائیں سے دائیں " " سنیں نیز مختلف  حُرُوف پر اُنگلی رکھ کراس سبق کا امتحان لیجئے کہ ان کو حرکات اور تنوین کی پہچان ہو گئی ہے یا نہیں ؟ کہیں ایسا نہ ہو کہ صرف رٹا لگا ہوا ہو اور پہچان نہ ہوئی ہو اور یہ بھی دیکھ لیجئے کہ مدنی منّا حرکات ، تنوین اور  حُرُوف کی ادائیگی میں فرق کر رہا ہے یا نہیں ؟

 



Total Pages: 39

Go To