Book Name:Bayaz e Paak Hujjat ul Islam

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ عَلٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

اَمَّا بَعْدُ فَاَعُوْذُ بِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ط  بِسْمِ اللہِ الرَّحْمٰنِ الرَّ حِیْم ط

پیش لفظ

            شہزادۂ اعلیٰ حضرت ، استاذِ محدثِ اعظم پاکستان، حجۃ الاسلام حضرت مولانا شاہ محمد حامد رضا خان قادری رضوی نوری عَلَیْہِ رَحْمَۃُ اللّٰہِ الْقَوِیکی ذاتِ بابرکات کو اللّٰہعَزَّوَجَلَّ نے بے شمار علوم وفنون اور ان گنت صفاتِ حمیدہ سے مالا مال کیا ہے ۔ دیگرخصوصیات کے ساتھ ساتھ آپ کے معمولات میں نَعت گوئی کا بھی بڑا حصہ رہا ہے ۔

            فنِ شاعری کی بات کی جائے تو نعتیہ شعر کہنا بھی کمال و مہارت رکھنے والوں ہی کا کام ہے کہ نعت گوئی ہرایک کے بس کی بات نہیں اوریہ بھی سمجھ لینا چاہئے کہ ہر کسی کا کلام اٹھاکرپڑھ لینادرست نہیں جب تک یہ یقین نہ ہوکہ یہ کلام شرعی غلطی سے پاک ہے لہذاہوسکے توعلماء وبزرگوں کاہی کلام پڑھاجائے کہ اسی میں عافیت ہے ، اس ضمن میں شیخِ طریقت، امیر اہلسنت، بانیِ دعوت اسلامی حضرت علامہ مولانا ابو بلال محمد الیاس عطار قادری دَامَتْ بَرَکَاتُہُمُ الْعَالِیَہ نے ایک موقع پر نعت خواں اسلامی بھائیوں کو مدنی پھول عطا فرماتے ہوئے ارشاد فرمایا : ’’اردو کلام سننے کیلئے مشورۃً’’ نعت رسول ‘‘کے سات حروف کی نسبت سے سات اسمائے گر ا می حاضِر ہیں {۱}امامِ اہل سنّت مولیٰنا شاہ امام احمد رضاخان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الرَّحْمٰن (حدائق بخشش) {۲} استاذِ زَمَن حضرت مولیٰنا حسن رضا خان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الْمَنَّان (ذَوقِ نعت) {۳}خلیفۂ   اعلیٰ حضرت ، مَدَّاح ُالحبیب حضرت مولیٰنا جمیل الرحمٰن رضوی  عَلَیْہِ رَحْمَۃُ اللّٰہِ الْقَوِی (قبالۂبخشش) {۴}شہزادۂ اعلیٰ حضرت، تاجدارِ اہلسنّت حضور مفتی اعظم ہند مولیٰنا مصطَفٰے رضا خان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الْحَنَّان  (سامانِ بخشش) {۵}شہزادۂ اعلیٰ حضرت ، حجۃ الاسلام حضرتِ مولیٰنا حامد رضا خان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الْمَنَّان  (بیاض پاک) {۶}خلیفۂ   اعلیٰ حضرت صدرُ الافاضِل حضرتِ علامہ مولیٰنا سیِّد محمد نعیم الدّین مُراد آبادی عَلَیْہِ رَحْمَۃُ اللّٰہِ الْہَادِی(ریاض النعیم) {۷} مُفَسّرِ شہیر حکیم الا مَّت حضر تِ مفتی احمد یار خانعَلَیْہِ رَحْمَۃُ الْحَنَّان(دیوانِ سالک) ۔ ‘‘ اسی وجہ سے مجلس مدنی چینل کے نگران ، رکن مرکزی مجلس شوریٰ ، مبلغ دعوت اسلامی ابوزیادمحمدعمادعطاری المدنی مدظلہ العالیٰ نے دعوت اسلامی کی علمی وتحقیقی مجلس المدینۃ العلمیہ کو حکم ارشادفرمایاکہ مذکورہ تمام کلاموں پر جدید اندازِ ا شا عت کے مطابق کام کیاجائے چنانچہ مجلس المدینۃ العلمیہ نے ان کے حکم پرلبیک کہتے ہوئے ’’حدائق بخشش‘‘پرکام کرنے کے بعد’’بیاضِ پاک‘‘ پرمندرجہ ذیل کام کرنے کی سعادت حاصل کی :  ٭جدید کمپوزنگ کروائی ٭ کمپوزنگ کا تقابل ’’مرکزی مجلس امام اعظم مرکزالاولیاء لاہور‘‘کے شائع کردہ نسخے سے کیاگیا، اس دوران یہ نسخے بھی سامنے  رکھے گئے (۱) رنگ رضا، مطبوعہ باب المدینہ کراچی(۲)تذکرۂ جمیل، مطبوعہ مکتبہ برکات المدینہ باب المدینہ کراچی(۳)فتاویٰ حامدیہ، زاویہ پبلشرز مرکزالاولیاء لاہور۔

 بیاض پاک کے حوالے سے اگرکسی اسلامی بھائی کوکہیں اور کوئی شعرملے جوہم ذکرنہیں کرسکے توبرائے مہربانی ہمیں ضرور مطلع کیجئے گا ان شاء اللّٰہ عَزَّوَجَلَّاگلے ایڈیشن میں شائع کردیاجائے گا ۔ ٭ الفاظ پر اعراب کا اہتمام کیا گیا ہے جو کہ کافی وقت اور محنت طلب کام تھا٭ ہر کلام کی ابتداء نئے صفحے سے کی گئی ہے اور کلام کے پہلے مصرعے کو ہیڈنگ کے طور پرلکھا گیا ہے ۔٭علم میں اضافے کے لیے جگہ جگہ تعریفات اورمدنی پھول اپنی خوشبوئیں لُٹارہے ہیں ۔

           اللّٰہ عَزَّوَجَلَّ کی بارگاہ میں اِ سْتِدْعا ہے کہ اس کتاب کو پیش کرنے میں علمائے کرام دَامَت فُیُوْضُہُمْ نے جو محنت وکوشش کی اسے قبول فرماکر انہیں بہترین جزا دے اورانکے علم وعمل میں برکتیں عطافرمائے اور دعوت ِاسلامی کی مجلس ’’المدینۃ العلمیۃ ‘‘ اور دیگر مجالس کو دن گیارھویں رات بارھویں ترقی عطا فرمائے ۔ آمین بجاہ النبی الامین صلی اللّٰہ علیہ واٰلہ وسلم

مجلس المدینۃ العلمیۃ

۱۹محرم الحرام۱۴۳۴ھ، مطابق4دسمبر2012ء

تذکرۂ حجۃ الاسلام مولانا حامد رضا خانعَلَیْہِ رَحْمَۃُ الرَّحْمٰن

ولادت :

٭… وارثِ علم ومعرفت ، نائبِ اعلی حضرت ، حجۃ الاسلام مولانا شاہ محمد حامد رضا خان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الرَّحْمٰن کی ولادت با سعادت ربیع الاول ۱۲۹۲ھ بمطابق ۱۸۷۵ ؁ء محلہ سودگراں بریلی شریف (یو۔پی)ہند میں ہوئی ۔

تعلیم وتربیت :

٭…آپ رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِ کی تعلیم وتربیت اپنے والد ماجد آفتابِ علم وفضل، مجدّدِدین وملت ، اعلیٰ حضرت امام احمد رضا خان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الرَّحْمٰن کے زیرِ سایہ ہوئی ، اورآپ نے اورادواعمال ، اذکار و اشغال اورجمیع سلاسل کی اجازت بھی عطا فرمائی ، بیعت وخلافت نورالعارفین حضرت سید ابوالحسین احمد نوری رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِ سے حاصل ہے ، آپ تمام



Total Pages: 18

Go To