Book Name:Nisab-ul-Mantiq

۱ ۔  واجب الوجود               ۲ ۔  ممتنع الوجود        ۳ ۔  ممکن الوجود

۱ ۔ واجب الوجود :

            جس کا عدم( نہ ہونا) محال ہو اور وجود(ہونا) ضروری ہو اس کلی کاایک ہی فرد پایا جاتا ہے یعنی ذات باری تعالی عزوجل ۔

۲ ۔  ممتنع الوجود :

            جس کا وجود محال ہو اورعدم ضروری ہو ۔ جیسے :  شریکِ باری تعالی ۔  

۳ ۔  ممکن الوجود :

            جس کا وجود اورعدم دونوں محال نہیں یعنی جس کا وجود وعدم دونوں ممکن ہوں  ۔ جیسے :  عنقاء، یاقوت کا پہاڑ وغیرہ ۔

 

 

مشق

سوال نمبر1 :  ۔ جزئی حقیقی اور جزئی اضافی کی تعریفات مع امثلہ لکھیں  ۔

سوال نمبر2 : ۔ کلی کے خارج میں پائے جانے کے اعتبار سے اس کی کتنی اور کون کون سی قسمیں ہیں ؟

سوال نمبر3 :  ۔ واجب الوجود، ممتنع الوجوداورممکن الوجود سے کیا مراد ہے ؟

٭…٭…٭…٭

 ٭علم اور معرفت میں فرق٭

          ان دونوں کے درمیان مختلف وجوہ سے فرق بیان کیا جاتاہے  ۔

(۱)…علم ادراک بالقلب کو کہتے ہیںاور معرفت ادراک بالحواس کو کہتے ہیں ۔

(۲)…علم کا استعمال کلیا ت میں ہوتاہے اور معرفت کا استعمال جزئیات میں ہوتاہے ۔

(۳)…علم جہل کی ضد ہے اور معرفت انکار کی ۔

(۴)…معرفت متعدی بیک مفعول ہے بخلاف علم کے کہ وہ کبھی متعدی بیک مفعول ہوتاہے اور کبھی بدو مفعول  ۔

سبق نمبر :  20

کلی کے اپنے افراد کی حقیقت سے خارج ہونے یا نہ ہونے کے اعتبار سے تقسیم

اس اعتبار سے کلی کی دو قسمیں ہیں  ۔

۱ ۔  کلی ذاتی                      ۲ ۔  کلی عرضی

۱ ۔ کلی ذاتی :

            جو کلی اپنے افراد کی حقیقت سے خارج نہ ہواسے کلی ذاتی کہتے ہیں  ۔ جیسے :  جنس ، نوع ، فصل  ۔

۲ ۔ کلی عرضی :

            جو کلی اپنے افراد کی حقیقت سے خارج ہووہ کلی عرضی ہے جیسے :  خاصہ ، عرض عام

کلی ذاتی کی اقسام

اس کی تین قسمیں ہیں  ۔

۱ ۔ جنس            ۲ ۔ نوع              ۳ ۔  فصل

۱ ۔ جنس :

            ’’ھُوَ کُلِّیٌّ  مَقُوْلٌ عَلیٰ کَثِیْرِیْنَ مُخْتَلِفِیْنَ بِالْحَقَائِقِ فِیْ جَوَابِ مَاھُوَ‘‘ یعنی جنس وہ کلی ہے جو مَاہُوَ کے جواب میں ایسے بہت سارے افراد پر بولی جائے جن کی حقیقتیں مختلف ہوں  ۔ جیسے :  حیوان ۔

 

وضاحت :

            جیسے انسان اورفرس ان دونوں کی حقیقتیں مختلف ہیں جب ہم ان کے بارے میں ماھما سے سوال کریں گے توجواب میں حیوان آئے گالہذا حیوان جنس ہے ۔

 



Total Pages: 54

Go To